دانت پیلے کیوں ہوتے ہیں؟ چھٹکارہ پانے کا طریقہ

دانت پیلے کیوں ہوتے ہیں؟ چھٹکارہ پانے کا طریقہ

ہمارے دانتوں کی چمک وقت کے ساتھ ساتھ ختم ہو جاتی ہے اور ان پر ایک پیلی رنگت آ جاتی ہے ، ایسے میں گھریلو اور سستے طریقے سے بھی دانتوں کے مسائل کا علاج موجود ہے۔نمک اور سرسوں کا تیل ایک پرانا گھریلو علاج ہے جو آپ کے مسوڑوں کو صاف کرنے اور دانتوں کے پیلاپن دور کرنے کے لیے استعمال ہوتا ہے، نمک دانتوں کو چمکانے اور ان کی نسوں میں موجود تناؤ کو دور کرنے میں مدد کرتا ہے۔ نمک فلورائیڈ کا ایک قدرتی ذریعہ ہے، جو آپ کے مسوڑوں اور دانتوں کے لیے فائدے مند ہے۔سرسوں کا تیل آپ کے مسوڑھوں کو مضبوط بناتا ہے پلاک دور کرتا ہے اور منہ میں موجود بیکٹیریاز کا خاتمہ کرتا ہے۔اگر کسی کے مسوڑھوں سے خون آتا ہے تو وہ دانتوں میں اچھی طرح سرسوں کا تیل لگائے اور ملے اس سے دانتوں کی حساسیت کم ہوگی اور مسوڑھوں کی سوجن دور ہو گی جبکہ خون آنا بھی بند ہو جائے گا۔دانتوں کو صاف، چمکدار پیلاپن دور کرنے اور ان کی حساسیت کو ختم کرنے کے لئے سرسوں کے تیل میں تھوڑا سا نمک ملا کر اسے اچھی طرح حل ہونے دیں پھر اسے برش میں لے کر اس سے دانت مانجیں