25 سے 29 مئی کے درمیان لانگ مارچ کا فیصلہ ہوگا، عمران خان

25 سے 29 مئی کے درمیان لانگ مارچ کا فیصلہ ہوگا، عمران خان

عمران خان نے کہا ہے کہ 25 سے 29 مئی کے درمیان لانگ مارچ کا فیصلہ ہوگا۔چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ شاندار استقبال پر ملتان کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔عمران خان نے کہا کہ دنیا میں نوجوانوں اور خواتین کے بغیر کوئی بھی انقلاب کامیاب نہیں ہوتا۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ میری قوم کسی سپرپاور، چور اور ڈاکووں کے سامنے نہیں جھکی، جب تک آپ خوف کے بت کو نہیں توڑیں گے جب تک عظیم قوم نہیں بنا سکتے۔عمران خان کا کہنا تھا کہ ملک کی اشرافیہ امریکی دھمکی سے ڈر گئے،22کروڑ عوام کے منتخب کردہ وزیراعظم کو سازش سے ہٹادیا جبکہ مجھے کہا گیا کہ آپ کی جان کو خطرہ ہے، کہا گیا بلٹ پروف شیشہ لگاؤ۔چیئرمین تحریک انصاف کا یہ بھی کہنا تھا کہ ہمیشہ دعا مانگی میری قوم جاگ جائے، جن کی کوئی حیثیت نہیں تھی انہوں نے دنیا کی امامت کی۔عمران خان نے کہا کہ جس بیٹس مین کو گیند لگنے کا خوف ہوتا ہے وہ بڑا بیٹسمین نہیں بنتا، تیز بولر سے خوف کھانے والا اچھا بلے باز نہیں بنتا اور جو کرکٹر ہار سے ڈرتا ہے اسے کرکٹ چھوڑ دینی چاہیے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ 30 سال سے اس ملک کو لوٹنے والوں نے سازش کی، ملک لوٹنے والوں نے کوشش کی کہ میں انہیں این آر او دوں۔ان کا کہنا تھا کہ ملک تب آگے بڑھتا ہے جب اس کی انڈسٹری ترقی کریں ، حکمرانوں کی وجہ سے اکستانیوں کو ذلت ملی، کبھی اپنی قوم کو کسی کے سامنے جھکنے نہیں دوں گا۔عمران خان نے کہا کہ جنوبی پنجاب سے سب سے زیادہ لوٹے نکلے ہیں، اس قوم کو کسی سے معافی کی ضرورت نہیں کیونکہ یہ خود دار قوم ہے۔انہوں نے یہ بھی کہا کہ ملک کو مقروض کرنے والے مسائل حل نہیں کر سکتے ،جو ترقی3سال میں ہوئی ان کے پورے 30سال میں نہیں ہوئی۔عمران خان کا کہنا تھا کہ کبھی یہ آئی ایم ایف کے پاس جارہے ہیں، کبھی لندن میں بیٹھا سزا یافتہ شخص فیصلہ کرتا ہے۔چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا یہ بھی کہنا تھا کہ جب آپ کو حکومت ملی ہے تو بتائیں ملک کیوں نہیں سنبھل رہا، کہتے ہیں شہبازشریف صبح7بجے جاگ جاتا ہے ، شہبازشریف میرا مالی صبح6بجے جاگ جاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ جتنی دیر یہ چلیں گے ملک کو سری لنکا بنا دینگے جبکہ جتنی دیر یہ اقتدار میں رہیں گے یہ ذلیل ہوں گے اور جو سازش کر کے ان کو لے آئے وہ بھی ذلیل ہوں گےعمران خان کا کہنا تھا کہ مریم نواز نے پورے جذبے اور جنون سے متعدد مرتبہ میرا نام لیا، دیکھو مریم اتنا زیادہ میرا نام نہیں لو کہیں تمہارا خاوند تم سے ناراض نا ہوجائے۔چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ شریف فیملی کے خلاف مقدمات میرے دور میں نہیں بنے تھے،، مریم اور ان کے خاندان کو مجھ سے غصہ کیوں ہے؟