مبینہ ڈاکو کے جنازے میں شامل 2 افراد قتل

کراچی میں شہریوں کے ہاتھوں تشدد سے ہلاک ہونے والے مبینہ ڈاکو کے جنازے میں شامل 2لوگوں کو گولیاں مار کر قتل کر دیا گیا۔ ایکسپریس ٹربیون کے مطابق 17سالہ بلال محمد خان نامی اس نوجوان کی ہلاکت کا واقعہ کراچی کی قصبہ کالونی میں پیش آیا۔ جہاں اسے اور اس کے دیگر دو ساتھیوں کو شہریوں نے پکڑ لیا اور تشدد کا نشانہ بنایا۔شہریوں کا کہنا تھا کہ تینوں ڈاکو تھے اور واردات کر رہے تھے جب انہیں پکڑا گیا۔ پولیس نے آ کرشہریوں سے ان تینوں کی جان چھڑائی تاہم تب تک بلال کی موت ہو چکی تھی۔ دیگر دو مبینہ ڈاکوﺅں کو پولیس نے شدید زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کر دیا۔بلال کی تدفین کے بعد جب لوگ گھروں کو واپس جا رہے تھے تو راستے میں فائرنگ سے ان میں سے 2جاں بحق اور ایک شدید زخمی ہو گیا۔جاں بحق ہونے والوں میں 17سالہ سلیمان خان اور ایک 60سالہ شخص شامل تھا۔ سلیمان خان درزی کا کام کرتا تھا اور اپنے دوست کے جنازے میں شرکت کے لیے اس نے دکان سے چھٹی کی تھی۔ رپورٹ کے مطابق کراچی پولیس کے سربراہ جاوید اوڈھو کا کہنا ہے کہ سلیمان اور دوسرے شخص کی ہلاکت کو بلال کے قتل سے مت جوڑا جائے۔ ڈی آئی جی سی آئی اے کی سربراہی میں ایک تین رکنی کمیٹی تشکیل دے دی گئی ہے جو واقعے کی تحقیقات کر رہی ہے۔