جامشورو، نہر میں نہاتے ہوئے 4 بچیاں ڈوب کر جاں بحق

جامشورو: شدید گرمی سے بچنے کے لیے نہر میں نہاتے ہوئے 4 بچیاں ڈوب کر جاں بحق ہوگئی ہیں۔تفصیلات کے مطابق یہ افسوسناک واقعہ دریاٸے سندھ سے نکلنے والی دانستر نہر میں پیش آیا جہاں 4 بچیاں نہر میں نہارہی تھیں کہ پاؤں سلپ ہونے پر ڈوب کر جاں بحق ہوگئیں۔ریسکیو نے بتایا کہ جاں بحق بچیوں کی شناخت 6 سالہ گل ناز ولد ایاز سولنگی،7 سالہ امڑی ولد رجب سولنگی، 8 سالہ مہناز ولد ایاز سولنگی اور 10 سالہ اسما ولد رجب سولنگی کے نام سے ہوئی ہے۔ریسکیو ذرائع کا کہنا ہے کہ بچیوں کی نعشیں سید عبداللہ شاہ انسٹیٹیوٹ سیہون منتقل کردی گئی ہیں جبکہ متاثرہ بچیوں میں دو دو بہنیں تھیں۔ذرائع نے بتایا کہ بچیاں گرمی سے بچنے کے لٸے نہر میں نہارہی تھی کہ پاؤں سلپ ہونے پر پانی کے تیز بہاؤ میں ڈوب گٸیں، نعشیں گھر پہنچنے پر گھر میں کہرام مچ گیا۔واضح رہے کہ متاثرہ خاندان سہون کے نواعی علاقہ گوٹھ شیر خان کے رہاٸشی ہیں۔اس سے قبل دریائے سندھ اٹک خورد کے مقام پر نہاتے ہوئے 3 نوجوان ڈوب گئے تھے جن کا تعلق تحصیل حضرو سے ہے۔ریسکیو ذرائع نے بتایا کہ ڈوبنے والے نوجوانوں کی تلاش کے لیے ریسکیو آپریشن جاری ہے۔ ضلع اٹک شدید گرمی کی لپیٹ میں ہے، لوگ گرمی کی وجہ سے دریائے سندھ اور نہروں کا روخ کررہے ہیں۔خیال رہے کہ پولیس نے لوگوں کو دریائےسندھ سے دور رکھنے کے لیے کارروائی شروع کردی ہے۔