’جب مفتاح ٹی وی پر آتا ہے تو پیٹرول مہنگا ہوتا ہے‘

وفاقی وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کا کہنا ہے کہ عوام میں ایک تاثر بن گیا ہے کہ جب بھی مفتاح اسماعیل ٹی وی پر آتا ہے تو پیٹرول مہنگا ہوجاتا ہے۔گزشتہ روز پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں سے متعلق اعلان کے بعد سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر ٹوئٹ کرتے ہوئے وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے لکھا ’’ پیٹرول کی قیمت میں اضافے کا اعلان مجھے ٹی وی پر آکر نہیں کرنا چاہیے تھا‘‘َ۔مفتاح اسماعیل نے اپنی ٹوئٹ میں مزید کہا کہ پیٹرول کی قیمت میں اضافے سے متعلق میرے دیگر ساتھی اعلان کرتے لیکن وزیراعظم شہباز شریف نے فیصلہ کیا تھا کہ وزیر مملکت برائے پیٹرولیم مصدق ملک اور مجھے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کا اعلان کرنا چاہیے۔بعد ازاں سوشل میڈیا پر مفتاح اسماعیل کا نجی ٹی وی پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے ایک کلپ بھی وائرل ہورہا ہے جس میں میزبان کی جانب سے پوچھے گئے سوال پر انہوں نے جواب دیا کہ آج رات میں آخری بار ٹی وی پر جاؤں گا اور اس کے بعد نہیں جاؤں گا کیوں کہ لوگ کہتے ہیں کہ جب مفتاح اسماعیل ٹی وی پر آتا ہے تو پیٹرول کی قیمت بڑھ جاتی ہے۔انہوں نے کہا کہ ہر 15 اور 30 تاریخ کو ہم سے صحافی پیٹرول کی قیمت میں اضافے سے متعلق پوچھتے ہیں لیکن ہم کچھ نہیں کہتے اور پھر شام میں یہ قیمتیں بڑھنی ہوتی ہیں تو بڑھ جاتی ہیں لیکن ابھی تک میرے پاس ایسی کوئی معلومات نہیں کہ پیٹرول کی قیمت میں آج مزید اضافہ ہوگا۔وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کا کہنا تھا کہ ہم نے قومی اسمبلی سے پیٹرول پر 50 روپے لیوی لگانے کی اجازت لے لی ہے لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ آج ہی 50 روپے کا اضافہ کردیں گے تاہم اس کی کوئی ڈیڈلائن نہیں ہے۔واضح رہے کہ مسلم لیگ (ن) کی مخلوط حکومت نے گزشتہ روز پیٹرول کی قیمت میں چوتھی بار اضافہ کیا جس سے پیٹرول کی فی لیٹر قیمت اب 248 روپے 74 پیسے ہوگئی ہے۔