مرغے کی بانگوں سے تنگ شہری نے پڑوسی کے خلاف عدالت جانے کا فیصلہ کرلیا

جرمنی میں ایک شہری نے مرغے کے بانگوں سے تنگ آکر پروسی کے خلاف عدالت جانے کا فیصلہ کرلیا ہے ۔
نجی ٹی وی کے مطابق جرمنی کے قصبے بیدسل زفلین کے رہائشی جوڑے کا کہنا ہے کہ ان کے ہمسائے کے مرغے کی بانگوں نے ان کی زندگی عذاب کر دی ہے ، مرغا ایک دن میں قریب 200 بار بانگیں دیتا ہے ۔76 سالہ فریڈرک اور ان کی اہلیہ کے مطابق مرغے کے باعث وہ اپنے گھر کے آنگن اور باغیچے میں نہیں بیٹھ سکتے ، حتیٰ کہ گھر کی کھڑکیاں بھی بند رکھتے ہیں مگر پھر بھی مرغے کی بانگوں سے تنگ آچکے ہیں ، انہوں نے مرغے کے مالک کو متعدد مرتبہ شکایت کی مگر ایکشن نہ ہونے پر اب عدالت جانے کا فیصلہ کیا ہے ۔
میڈیا رپورٹوں کے مطابق فریڈرک اور دیگر رشتے دار مرغے کی بانگیں ریکارڈ بھی کی جا رہی ہیں تاکہ بطور ثبوت عدالت میں پیش کر سکیں.ادھر مرغے کے مالک مائیکل نے موقف اختیار کیا کہ یہ مرغا میری مرغیوں اور باغیچے کیلئے اشد ضروری ہے ۔