بال گِرنے کے مسئلے سے چھٹکارا کیسے ممکن ہے؟

آج ہم آپکو بتائیں گے کہ بال گِرنے کے مسئلے سے چھٹکارا کیسے ممکن ہے۔بال گرنے کی وجوہات ہارمونی تبدیلی، کسی اور بیماری کا شکار ہونے اور اس کے طِبّی علاج کے کسی ذیلی اثر پر بھی مشتمل ہو سکتی ہیں۔بال گرنے کی شکایت ہر کسی میں پیدا ہوسکتی ہے لیکن عام طور پر مرد اس کا زیادہ شکار ہوتے ہیں۔ماہرینِ صحت کے مطابق پروٹین اور آئرن سے بھرپور غذا کا استعمال ممکنہ طور پر بالوں کو شیمپو میں موجود نقصان دہ کیمیکلز سے محفوظ رکھتا ہے جبکہ مرد حضرات کو تو یہ غذا بال گرنے سے چھٹکارہ پانے میں بھی مدد فراہم کرسکتی ہے۔ماہرین کا کہنا ہے کہ مردوں کو جتنی جلدی ہوسکے اپنی غذا میں انڈے، بیف، چنے، لوکی کے بیج اور سیاہ لوبیا شامل کر لینا چاہیے۔غذا میں اضافی پروٹین بالوں کے غدود کو بڑھنے میں مدد دیں گے جبکہ اضافی آئرن کی مدد سے ریڈ بلڈ سیلز زیادہ مقدار میں آکسیجن خلیوں تک لے جاسکیں گے۔ماہرین نے ایسے شیمپو کے استعمال سے خبردار کیا جن میں سلفیٹ اور فورمل ڈی ہائیڈ ہوتا ہے۔سلفیٹ تقریباً ہر شیمپو میں ہی موجود ہوتا ہے جس کی وجہ سے شیمپو سفید جھاگ بناتا ہے جبکہ فورمل ڈی ہائیڈ ایک کلیننگ ایجنٹ ہوتا ہے جو کہ بیکٹیریا کو مارنے میں مدد کرتا ہے۔ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ اجزاء بالوں کے لیے نقصان دہ اور بالوں کے گِرنے کے عمل میں اضافہ کر سکتے ہیں۔

کیٹاگری میں : صحت