طلاق کے معاملے پر فیروز خان کا موقف آگیا

پاکستانی اداکار فیروز خان نے طلاق اور بچوں کی حوالگی کے معاملے پر اپنا موقف جاری کردیا.سوشل میڈیا پر جاری اپنے ایک بیان میں فیروز خان نے کہا کہ ان کی 3 ستمبر کو طلاق ہوئی تھی جس کے بعد انہوں نے بچوں سے ملاقات کا حق حاصل کرنے کیلئے 19 ستمبر کو عدالت سے رجوع کیا.انہوں نے بتایا کہ 21 ستمبر کو عدالت نے انہیں بچوں سے ان کی ماں کی موجودگی میں ملاقات کی اجازت دیتے ہوئے مزید سماعت یکم اکتوبر تک ملتوی کردی.اداکار کا کہنا تھا کہ وہ اس معاملے پر اس سے زیادہ کچھ نہیں کہیں گے کیونکہ مقدمہ عدالت میں زیر سماعت ہے، انہیں پاکستان کے عدالتی نظام پر مکمل بھروسہ ہے.خیال رہے کہ اس سے قبل فیروز خان کی سابق اہلیہ سیدہ علیزے نے فیروز خان پر ذہنی و جسمانی تشدد، بلیک میلنگ اور بے وفائی کے الزامات عائد کیے تھے.