کیا آپ فالج کی خاموش علامات سے واقف ہیں؟

فالج کا حملہ اس وقت ہوتا ہے جب دماغ کو خون کی فراہمی کم یا اس میں خلل پیدا ہونے کے سبب دماغ غذائی اجزاء اور آکسیجن سے محروم ہوجاتا ہے جس کے نتیجے میں دماغی خلیات مردہ ہونے لگتے ہیں۔تاہم فالج بلڈ کلوٹ کی وجہ سے شریان کے بند ہونے جسے (اسکیمک اسٹروک)، یا خون کی نالی کے پھٹنے یا رسنے (ہیموریجک اسٹروک) کی وجہ سے بھی ہوسکتا ہے۔اسی طرح کچھ افراد اپنے دماغ میں خون کے بہاؤ میں عارضی رکاوٹ کی بنا پر بھی فالج کا سامنا کر سکتے ہیں، جسے عارضی اسکیمک اٹیک کہا جاتا ہے۔فالج کے نتیجے میں کچھ واضح علامات سامنے آتی ہیں جن کا جاننا آپ کے لیے نہایت ضروری ہے تاکہ آپ ان علامات کو جان کر فوری قدم اٹھا سکیں اور انسانی جان کو بچایا جاسکے۔
فالج کی علامات:
الجھن یا پریشانی۔
غیر واضح گفتگو۔
بغیر کسی وجہ کے شدید سر درد۔
بصارت میں دھندلاہٹ یا ڈبل وژن۔
توازن کھودینا یا ہم آہنگی میں کمی۔
پیروں، بازو یا چہرے کا بے حس ہوجانا۔
فالج کا حملہ ہونے کی صورت میں ہر سیکنڈ قیمتی ہوتا ہے کیونکہ بروقت علاج سے دماغ کو مزید نقصان سے بچایا جاسکتا ہےجو فالج کا سبب بن سکتا ہے۔
احتیاطی تدابیر:
فالج کا بہترین علاج ان تمام عوامل سے دور رہنا جو فالج کا سبب بنتے ہیں ان میں جو عوامل شامل ہیں وہ یہ ہیں۔
ہر طرح کے نشے سے دور رہنا۔
روزانہ ورزش کرنا۔
پھلیاں، گری دار میوے اور سبزیاں کو زیادہ غذا میں شامل رکھنا۔

کیٹاگری میں : صحت