ایف پی ایس سی نے امتحانات میں پرائیویٹ نگرانوں کی خدمات حاصل کیں، آڈٹ میں انکشاف

آڈٹ میں انکشاف ہو اہے کہ فیڈرل پبلک سروس کمیشن (ایف پی ایس سی )نے امتحانات میں پرائیویٹ نگرانوں کی خدمات حاصل کیں۔کانٹینٹ سیل بول نیوز اسلام آبادکو دستیاب سرکاری دستاویزات کے مطابق وفاقی پبلک سر وس کمیشن آف پاکستان کے آڈٹ کے دوران انکشاف ہوا ہے کہ کمیشن نے 2022ـ21 کے مختلف امتحانات کے لیے امیدواروں کی نگرانی کے لیے نجی نگرانوں کی خدمات حاصل کیں۔آڈیٹر جنرل آف پا کستان کی رپورٹ کے مطا بق کمیشن نے ان پرائیویٹ نگرانوں کو 68 لاکھ 11 ہزار روپے معاوضہ ادا کیا جو خلاف ضابطہ ہے۔ کمیشن نے ان نجی نگرانوں کی خدمات حاصل کرنے کے لیے کوئی ایس او پی یا ریگولیشن وضع نہیں کیے ۔ایف پی ایس سی نگرانوں کا انتخاب پبلک میں سے بغیر کسی تصدیقی عمل کے کیا گیا اور ان کے تعلیمی ، کریمنل اور کردار کی ویری فیکیشن نہیں کی گئی۔ صرف ان سے شناختی کارڈ اور موبائل فون نمبرز حاصل کیے گئے۔آڈٹ حکام نے نمونے کے طور پر ایک سیمپل کو چیک کیا تو 75 فیصد شناختی کارڈ نمبر جعلی تھے۔