اب سندھ میں کوئی اسکول بند نہیں ہوگا، سردار شاہ

سردار شاہ اب سندھ میں کوئی اسکول بند نہیں ہوگا، اساتذہ بھرتی کر چکے ہیں۔تفصیلات کے مطابق صوبائی وزیر ثقافت و تعلیم سردار شاہ نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کورونا اور سیلاب کی وجہ سے کچھ ایکٹوٹیز تعطل کا شکار ہوئیں۔انہوں نے کہا کہ حیدرآباد کو ثقافت کے حوالے سے خاص اہمیت حاصل ہے جبکہ جمن در بدر نے اپنی پوری زندگی جمہوریت و فن کیلئے وقف کر دی تھی۔ ان کا کہنا تھا کہ ثقافت کے حوالے سے سندھ بھر میں تقریبات ہوں گی، اس قسم کے پروگرام برداشت کو فروغ دیتے ہیں۔سردار شاہ نے کہا کہ موہن جو دڑو کی صد سالہ تقریبات کا پہلا مرحلہ پیرس میں ہوگا جبکہ دوسرے مرحلے میں موہن جو دڑو کے حوالے سے تقریبات ہوں گی۔انہوں نے کہا کہ عمران خان کا مارچ لانگ مارچ نہیں رانگ مارچ ہے جبکہ عمران کی کارستانیوں کے بعد دو دہائیوں تک بحالی ممکن نہیں ہے۔ان کا کہنا تھا کہ عمران خان ایک ڈرامہ اور یہودی ایجنٹ ہے، اس کو انتشار پھیلانے کیلئے لاؤنچ کیا گیا ہے۔ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ بلدیاتی انتخابات نہ کرانا مجبوری ہے، ہمارے پاس سیکورٹی کیلئے پولیس نہیں ہے کیونکہ پولیس و رینجرز سیلاب متاثرہ علاقوں میں مصروف ہیں۔صوبائی وزیر ثقافت و تعلیم سردار شاہ نے مزید کہا کہ جو اسکول بند تھے وہ اساتذہ کی کمی کی وجہ دے تھے لیکن اب سندھ میں کوئی اسکول بند نہیں ہوگا، اساتذہ بھرتی کر چکے ہیں۔