رواں مالی سال جولائی سے اکتوبر تک لیے گئے قرض کی تفصیلات سامنے آگئیں

حکومت کی جانب سے رواں مالی سال جولائی سے اکتوبر تک لیے گئے قرض کی تفصیلات سامنے آگئیں۔وزارت اقتصادی امور کی رپورٹ کے مطابق رواں مالی سال جولائی سے اکتوبر تک 4 ارب 25 کروڑ ڈالر قرض لیا گیا۔صرف گزشتہ ماہ اکتوبر کے دوران 2 ارب 25 لاکھ ڈالر کا قرض لیا گیا۔کثیرالجہتی معاہدوں کے تحت جولائی سے اکتوبر 2 ارب 68 کروڑ ڈالر جبکہ دوطرفہ معاہدوں کے تحت جولائی سے اکتوبر 49 کروڑ 74 لاکھ ڈالر قرض لیا گیا۔جولائی سے اکتوبر کے دوران آئی ایم ایف سے ایک ارب 16 کروڑ ڈالر قرض لیا گیا۔اسی عرصے کے دوران کمرشل بینکوں سے 20 کروڑ ڈالر، اے ڈی بی سے ایک ارب 63 کروڑ ڈالر اور آئی ڈی اے سے 45 کروڑ 92 لاکھ ڈالر قرض لیا گیا۔اس کے علاوہ اسلامک ڈیویلپمنٹ بینک سے ایک کروڑ 34 لاکھ ڈالر، سعودی عرب سے آئل فیسلیٹی کی مد میں 40 کروڑ ڈالر ، باہمی معاہدوں کے تحت چین سے 5 کروڑ 49 لاکھ ڈالر، فرانس سے 84 لاکھ ڈالر، کوریا سے ایک کروڑ 66 لاکھ ڈالر قرض لیا گیا۔جولائی سے ستمبر کے دوران مجموعی طور پر 4 کروڑ 61 لاکھ ڈالر کی گرانٹس بھی ملیں۔