سید تسنیم حیدر کے انکشافات پر پی ٹی آئی رہنماؤں کا سخت ردعمل

سید تسنیم حیدر کی پریس کانفرنس پر پی ٹی آئی رہنماؤں کا سخت ردعمل سامنے آگیا۔تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن لندن کے ترجمان سید تسنیم حیدر شاہ نے پریس کانفرنس میں یہ دعوٰی کیا ہے کہ عمران خان پر قاتلانہ حملے اور ارشد شریف کا قتل کروانے میں مسلم لیگ ن کا ہاتھ تھا۔
پی ٹی آئی رہنماؤں کا ردعمل
فواد چوہدری
وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات و پی ٹی آئی کے سینئر رہنما فواد چوہدری نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں کہا کہ ہم نے ترجمان مسلم لیگ ن تسنیم حیدر کے انکشافات کی جامع تحقیقات کا مطالبہ کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ ن لیگ کے چمچے کڑچھے شور مچا رہے ہیں کہ تسنیم حیدر ایک جرائم پیشہ آدمی ہے، بھائی اس کو ہائیر بھی جرم کیلئے ہی کیا جا رہا تھا ،اس کو قتل کیلئے کہا جا رہا تھا کون سا یتیم خانہ چلانا تھا۔
سینیٹر و پی ٹی آئی رہنما فیصل جاوید خان نے سید تسنیم حیدر کی پریس کانفرنس پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ حکومتی جماعت ن لیگ کے رہنما اور ترجمان کی پریس کانفرنس کو پی ٹی وی کیوں نہیں دکھا رہا؟ان کا کہنا تھا کہ نہ صرف پی ٹی وی بلکہ دیگر ن زدہ چینلز بھی ان اہم الزامات اور انکشافات پر کوئی کوریج نہیں دے .
عثمان ڈار
پی ٹی آئی رہنما عثمان ڈار نے اپنے ٹوئٹ میں کہا کہ عمران خان پر حملے اور ارشد شریف کے قتل کی پلاننگ لندن میں میاں نواز شریف کے زیر سر پرستی ہوئی، یہ بات ن لیگ کا اپنا ترجمان کہہ رہا ہے۔ان کا کہنا تھا کہ میں چیف جسٹس آف پاکستان سے مطالبہ کرتا ہوں کہ اس کیس پر فوری سو موٹو لیں۔
حکومت پنجاب کی ترجمان مسرت جمشید چیمہ نے ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ اس وقت جب ارشد شریف شہید کا ایک قاتل بےنقاب ہوا ہے اس ویڈیو نے شہید کی یاد تازہ کر دی ہے، ظالموں نے کیسا سپوت چھین لیا۔ان کا کہنا تھا کہ اللہ سے دعا ہے کہ اس سازش میں شریک ہر سازشی کو نشان عبرت بنا دے۔