یورپی یونین کی خارجہ پالیسی کے سربراہ جوزف بورل نے افغانستان میں طالبان سے بات چیت کو واحد آپشن قرار دیا

 خارجہ پالیسی کے سربراہ جوزف بورل نے کہا کہ افغانستان میں طالبان سے بات چیت کے سوا یورپ کے پاس کوئی اور آپشن نہیں ہے۔

جوزف بورل کا کہنا تھا کہ  کابل میں سفارتی موجودگی کے لیے برسلز کو یورپی حکومتوں کے ساتھ تعاون درکار ہوگا۔فغانستان میں بحران ابھی ختم نہیں ہوا، اب ہمارے پاس کسی بھی واقعے پر اثر انداز ہونے کے لیے کوئی موقع نہیں، سوائے طالبان کے ساتھ رابطے کے اب ہمارے پاس کوئی آپشن نہیں مگر ہم انسانی حقوق کی اہمیت پر زور دیں گے۔

Star Asia

اسٹار ایشیا پاکستان کا مقبول نیوز چینل ہے۔

Read Previous

عملے میں شامل متعدد افراد کے کورونا وائرس سے متاثر ہونےکے بعد روسی صدر نے خود ساختہ تنہائی اختیار کرلی۔

Read Next

وزیر اوقاف سید سعید الحسن کا داتا گنج بخش ؒ کا978 واں سالانہ عرس مبارک کی تقریبات کو حتمی شکل دینے کے حوالے سے منعقدہ اجلاس سے خطاب